35

صدارتی انتخابات میں ٹرمپ کی جیت کا امکان روشن،وجہ اہم سامنے آگئی؟

امریکی :صدر جو بائیڈن کی جانب سے اسرائیل کی غیر مشروط حمایت پرصدارتی انتخابات میں ان کی جیت کو شدید خطرات لاحق ہوگئے ہیں میڈیا کے مطابق 100 سے زائد ڈیموکریٹک عطیہ دہندگان و کارکنوں نے امریکی صدر جوبائیڈن کی انتخابی مہم کی انتظامیہ کو خط لکھ دیا ہے عرب میڈیا کا کہنا ہے کہ 100 سے زائد ڈیموکریٹک عطیہ دہندگان اور کارکنوں نے جوبائیڈن کی انتخابی مہم کی انتظامیہ کو خط لکھ کر اسرائیلی آپریشن کی غیر مشروط حمایت پر صدر بائیڈن کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔انہوں نے انتباہ کیا ہے کہ موجودہ امریکی صدر بائیڈن کی اسرائیل کی حمایت پر بڑھتا عوامی غصہ سابق صدر ٹرمپ کی جیت کے امکانات کو بڑھا رہا ہے دوسری جانب امریکی صدر بائیڈن کے دیرینہ ساتھی ٹام کارپر کی زیرقیادت 19 ڈیموکریٹک سینیٹرز نے ایک خط میں کہا ہے کہ مشرق وسطیٰ کا بحران ایک ایسے موڑ پر پہنچ گیا ہے جس کے لیے امریکی قیادت کو ماضی کی ”سہولت”سے آگے کی ضرورت ہے سینیٹرز نے لکھا کہ ہم بائیڈن انتظامیہ سے فوری طور پر یک جرات مندانہ، عوامی فریم ورک قائم کرنے کی درخواست کرت ہیں جو ضروری اقدامات کا خاکہ پیش کرے ےسینیٹرز نے کہا کہ وہ نیتن یاہو کے فلسطینی ریاست کے راستے پر جانے سے انکار سے خاص طور پر مایوس ہوئے ہیں آپ اور آپ کی انتظامیہ نے جو سفارتی اقدامات کیے ہیں وہ انتہائی اہمیت کے حامل ہیں اور ہم آپ سے اور بھی زیادہ کرنے کی اپیل کرتے ہیں۔بائیڈن کو یہ خط سینیٹ کے اکثریتی رہنما چک شومر کے بعد آیا ہے جو ملک کے اعلیٰ ترین یہودی منتخب رہنما اور اسرائیل کے دیرینہ وکیل ہیں جنہوں نے غزہ جنگ پر نیتن یاہو کے طرز عمل پر تنقید کرتے ہوئے نئے اسرائیلی انتخابات پر زور دیا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں