16

پاکستان: کا ملٹی مشن کمیونیکیشن سیٹلائٹ ‘پاک سیٹ ایم ایم ون’ آج لانچ کیا جائے گا

اسلام آباد : پاکستان کا ملٹی مشن کمیونیکیشن سیٹلائٹ پاک سیٹ ایم ایم ون آج لانچ کیا جائے گا، سیٹلائٹ دور درازعلاقوں میں ہائی اسپیڈ کنیکٹوٹی اوربراڈبینڈ سروس میں معاونت کرے گا تفصیلات کے مطابق پاکستان چین کے تعاون سے ملٹی مشن کمیونیکیشن سیٹلائٹ ‘پاک سیٹ ایم ایم ون’ لانچ کرنے کے لیے پوری طرح تیار ہے، جو کامیابی کے بعد مواصلاتی نظام میں اہم سنگ میل ثابت ہوگا سپیس اینڈ اپر ایٹماسفیئر ریسرچ کمیشن (سپارکو) کے ترجمان کا کہنا ہے کہ پاک سیٹ چین کے شیچانگ سیٹلائٹ لانچ سینٹر سے خلاء میں بھیجا جائے گا ترجمان نے بتایا کہ جدید کمیونی کیشن سیٹلائٹ ایم ایم ون کی ٹیسٹنگ مکمل ہوچکی ہے ، سیٹلائٹ جدید کمیونیکیشن سروسز فراہم کرے گا اور دوردرازعلاقوں میں ہائی اسپیڈ کنیکٹوٹی اوربراڈبینڈ سروس میں معاونت کرے گا سپارکو کا مزید کہنا تھا کہ سیٹلائٹ خراب ترین موسمی حالات میں بھی مستحکم کنیکٹوٹی فراہم کرے گا، اس سیٹلائٹ کی لائف 15 سال ہو گی ترجمان کے مطابق ملٹی مشن کمیونیکیشن سیٹلائٹ سپارکو اور چینی ایرو اسپیس انڈسٹری کی مشترکہ کاوش ہے، اور اسے ملک کی مواصلات اور رابطے کی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے ڈیزائن کیا گیا ہے یاد رہے پاکستانی سیٹلائٹ آئی کیوب قمر چینی مشن چانگ ای 6 کیساتھ 3 مئی کو چاند پرروانہ ہواتھا، یہ تاریخی لمحہ پاکستان کے وقت کے مطابق 3 مئی کی دوپہر 2 بج کر 18 منٹ پر چین کے ہینان اسپیس لانچ سائٹ سے خلا میں بھیجا گیا تھا اس موقع پر پاکستان کے ماہرین کی ٹیم اسپیس سینٹر میں موجود تھی۔ سیٹلائٹ مشن کی روانگی کے وقت لانچ سائیڈ پر پاکستان کا قومی ترانہ پڑھا گیا اور نعرہ تکبیر سے ہال گونج اٹھا انسٹیٹیوٹ آف اسپیس ٹیکنالوجی کی کور کمیٹی کے رکن ڈاکٹر خرم خورشید نے بتایا کہ آئی کیوب قمر کا ڈیزائن اور ڈیویلپمنٹ چین اور سپارکو کے اشتراک سے تیار کیا گیاپاکستان کے مصنوعی سیارے کا وزن 7 کلو ہوگا اور چاند کے مدارکے چکر کاٹے گا ۔ اس مشن سے لی جانے والی تصاویر تحقیقی مقاصد میں کام آئیں گی بعد ازاں پاکستان کے پہلے سیٹلائٹ مشن ’آئی کیوب قمر‘نے کامیابی کیساتھ چاند کے مدار سے پہلی تصویر بھیجی تھی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں