21

نیب ترمیمی آرڈیننس کا گزٹ نوٹیفکیشن جاری

اسلام آباد : نیب ترمیمی آرڈیننس کا گزٹ نوٹیفکیشن جاری کردیا گیا، جس میں زیرحراست ملزم کا ریمانڈ 14 دن سے بڑھا کر 40 دن کردیا ہے تفصیلات کے مطابق قائم مقام صدر مملکت اور چیئرمین سینیٹ یوسف رضا گیلانی کی منظوری کے بعد وزارت قانون وانصاف نے نیب ترمیمی آرڈیننس دوہزار چوبیس کا گزٹ نوٹیفکیشن جاری کردیا ۔نیب آرڈیننس کے تحت زیر حراست ملزم کا ریمانڈ چودہ دن سے بڑھاکر 40 دن کردیا گیا ہے جبکہ نیب افسر کی جانب سے بدنیتی پر مشتمل نیب ریفرنس بنانے پر سزا پانچ سال سے کم کر کے دو سال کر دی گئی ہے ساتھ ساتھ جرمانہ بھی کیا جائے گا ایم کیو ایم پاکستان اور مسلم لیگ ن کے رہنما خواجہ سعد رفیق پہلے ہی نیب آرڈیننس کی مخالفت کرچکے ہیں پیپلزپارٹی کے دوسینئررہنما بھی نیب ترمیمی آرڈیننس کے مخالف ہیں ، رضا ربانی کا کہنا ہے کہ الیکشن ایکٹ اورنیب ترمیمی آرڈیننس جلد بازی میں جاری کیے گئے، قائم مقام صدرنے کوئی وجہ پیش نہیں کی، آرڈیننس کے اجرا کی مذمت کرتے ہیں فاروق ایچ نائیک کا کہنا ہے کہ آرڈیننس کےذریعےکی گئی نیب ترمیم واپس لی جائےیہ کالاقانون ہے، چودہ دن سےزیادہ ریمانڈ قانون کی نفی کرتا ہے، سوال یہ ہے جو افسرجھوٹا مقدمہ بنائے اسے سزا کیوں نہ ہو

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں